کاکروچیز سے چھٹکارا پانے کے لیے4 زبردست گھریلو ٹوٹکے

281

کاکروچیزیا روچیز ان کو جو بھی کہا جاتا ہو یہ اتنا گندا کیڑاہے کہ ان کے ساتھ اپنا گھر شیئر کرنا کسی کو بھی منظور نہیں ہے لیکن یہ جس گھر میں بھی گھس جاتے ہیں اس سے نکلنے کا نام ہی نہیںلیتے اس کے علاوہ گھر میں رہتے ہوئے یہ آپ کے کھانے کی اشیاء خراب کرتے ہیں ،دیواروں پر لگی پینٹنگز خراب کرتے ہیں، کتابوں اور الیکٹرونکس کی چیزوں کو نقصان پہنچاتے ہیں۔کاکروچیزپورے گھر میں مختلف قسم کی بیماریوں کی وجہ بننے والے بیکٹیریا پھیلاتے ہیں ۔یقیناآپ ان سے جان چھڑانے کے لئے بازاری سپرے اور کیمیکلز کا استعمال بھی کرتے ہوں گے۔
لیکن آپ اس گھر میں اکیلے تو نہیں رہتے ،آپ کے ساتھ آپ کے والدین ،بیوی، بچے اور پالتو جانور بھی تو ہیں ۔ یہ تمام کیمیکلز جو کوکروچیز کو مارنے کے لیے استعمال کیے جاتے ہیںیہ آپ کی فیملی کے لیے اچھے نہیں ہیںتو کیوں نہ کچھ گھریلو طریقہ کار، کچھ ترکیبیں آزمائی جائیں تا کہ کاکروچیز سے بھی مستقل طور پر چھٹکارا مل جائے اور آپ کے گھر پر موجو د دوسرے افراد کو بھی پریشانی کا سامنا نہ ہو۔ یہ گھریلو ترکیبیں مکمل طور پر قدرتی طریقہ کار کے تحت بنائی گئی ہیں اور بازاری کیمیکل پروڈکٹس سے کہیں زیادہ سستی ہیں۔
سرخ مرچ کی مدد سے کاکروچیز کاخاتمہ
سر خ مرچ    :    ایک چائے کا چمچ
لہسن کے جوے    :    دو عدد (پسا ہوا)
سفید پیاز        :    آدھا (پسا ہوا
پانی         :    چار کپ
ترکیب اور طریقہ استعمال
سرخ مرچ،لہسن اور سفید پیاز کو ملا لیں ۔ اب چار کپ پانی کوابالیں اور ان سب اشیاء کو ابلتے ہوئے پانی میں ڈال دیں۔اب چولہابند کر دیں اور مکسچرکو ٹھنڈا ہونے دیں ۔ٹھنڈا ہونے پر اسے کسی سپرے بوتل میں ڈال لیں اور ہر اس جگہ پر سپرے کریں جہاں کوکروچیز موجود ہوں ۔ایک ہفتے میں دو دفعہ کے استعمال سے ہی آپ کوکروچیز کو مار بھگائیں گے۔
بورک ایسڈ کے ذریعے کاکروچیز کا خاتمہ
بورک ایسڈ    :    دوچائے کے چمچ   (بازار سے پائوڈر کی شکل میں مل جاتا ہے)
آٹا        :    ایک چائے کا چمچ
چینی         :    ایک چائے کا چمچ
طریقہ استعمال
ان تینوں اشیاء کو مکس کرلیں ایک پائوڈر سا بن جائے گا۔ اس پائوڈر کو درازوں میں، کچن کی دیواروں کے کونوں میںیا جہاں آپ کا کوکروچزکے بلوں کا پتہ ہو ان کے قریب ڈالیں اور ہفتے میں تقریباً تین سے چار بار اس کا استعما ل کریں تا کہ کاکروچیزکا اچھے سے خاتمہ ممکن ہو۔ اس کو گھر میں موجود بچے یا پالتو جانور غلطی سے کھا بھی لیں توکوئی نقصان کی بات نہیں ہے کیونکہ بورک ایسڈ انسانوںاور پالتوجانوروں کے لیے نقصان دہ نہیں ہے لیکن پھر بھی احتیاط برتنی چاہیے۔اس میں بورک ایسڈکاکروچیزکو مارنے کا کام کرتا ہے اور آٹا اور چینی کاکروچیز کو اپنی طرف کھینچتے ہیں۔
کھیرے کے چھلکے سے کاکروچیزسے چھٹکارا
تازہ کھیرے کے چھلکے     :    ایک کھیرے کے چھلکے اتار لیں
ایلومینیم کین        :    ایک عدد  (پیپسی ،مرنڈایا کسی اور ڈرنک کا کین)
طریقہ استعمال
ایک عدد کھیرے کے چھلکے اتار کر ان کو ایلومینیم کین میں رکھ دیں ۔ ایک گھنٹہ ایلومینیم کین میں پڑے رہنے دیں پھر نکال کر ان چھلکوں کو ان جگہوں پر رکھیں جہاں آپ کاکروچیزکو زیادہ تر دیکھتے ہیں یا ان کے بلوں کے پاس رکھ دیں ۔ ہفتے میں دودفعہ ایساکریں۔ کوکروچیز کھیرے کے چھلکے کی طرف اسے کھانے کے لیے آئیں گے اور ایلومینیم کی وجہ سے ختم ہو جائیں گے۔
کھانے کے سوڈے سے کاکروچیز کا خاتمہ
کھانے کا سوڈا    :    ایک چائے کاچمچ
چینی         :    ایک چائے کا چمچ
طریقہ استعمال
کھانے کا سوڈا اور چینی کو مکس کر لیں اور اسے کسی چھوٹی شیشی میں ڈال کر رکھ لیں ۔ کھانے کا سوڈاکاکروچیز کے لیے بہت خطرناک ہے جیسے ہی کاکروچیز چینی کی وجہ سے اسے کھانے آئیں گے تواس میں موجود کھانے کے سوڈے کی وجہ سے ان کی موت یقینی ہے ۔ اس کا استعما ل کچن ، دیواروں کے کونوں ،درازوںاور ایسی جگہوں پرکریں جہاںکاکروچیز کے ہونے کا خدشہ ہوتا ہے ۔ دو سے تین دفعہ کے استعمال پرکاکروچیز کا مکمل طور پر خاتمہ ہوجائے گا۔
کاکروچیز کو بھگانے کے لیے کری پتہ کا استعمال بھی کیا جاتا ہے ۔ کاکروچیز کری پتے کی خوشبو برداشت نہیں کرسکتے اور اس کو سونگھتے ہی وہاں سے بھاگ نکلتے ہیں۔ یہ ایک آسان طریقہ ہے جس سے کاکروچیزمریں گے تو نہیں ہاں البتہ آپ کے گھر سے ضرور بھاگ جائیں گے۔کاکروچیز کو ختم کرنے کا یہ عمل کم از کم ایک ہفتے پر مشتمل ہے ،کیونکہ اس طریقہ سے موجودہ کاکروچیزتو ختم ہو جائیں گے لیکن ان کے انڈوں سے نکلنے والے کاکروچیزکے لیے بھی یہی طریقہ کار اپنانا پڑے گا۔