قبض اب نہیں رہے گی

494

قبض کے مسلسل رہنے سے معدہ اور انتڑیوں میں خرابی پیدا ہوتی ہے اور اس کے باعث بے شمار امراض جنم لیتے ہیں ۔ اس لیے صحت مندر رہنے کیلئےقبض سے چھٹکارا پانا بے حد ضروری ہے ۔ قبض کو ام لامراض بھی کہاجاتاہے ۔ اس مرض میں مردوں کے مقابلے میں خواتین زیادہ متاثر ہوتی ہیں ۔ قبض کی وجہ دراصل غذامیں فائبرکی کمی ، جسمانی سرگرمیوں کو کم کرنا ، پانی کم پینا ، ادویات کے منفی اثرات یا مختلف قسم کے بازاری کھانے ہیں ۔
آج کل ہر دسواں آدمی اس مرض میں مبتلا ہے ۔ اگر اس کا بروقت علاج نہ کروایا جائے تو کئی بیماریاں اس کے باعث پیدا ہو سکتی ہیں ۔ قبض کی صورت میں سانس سے بد بو آنا ، زبان پر سفیدہ ، پیٹ میں درد ، پیٹ کا پھولنا ، بد ہضمی ، سردراوربے چینی وغیرہ پیدا ہوتی ہے ۔ دائمی قبض سے نجات کے لیے یہ نسخہ بہت کار آمدہے ۔

اس نسخے کو بنانے کیلئے ہمیں چاہیے
بڑی ہڑ : آدھا چائے کاچمچ
چھوٹی ہڑ : آدھاچائے کاچمچ
آملہ : ایک گلاس
دودھ : ایک گلاس
نوٹ:یہ تمام چیزیں پسی ہوئی ہونی چاہیے

تر کیب وطریقہ استعمال
ان تینوں اجزاء کا باریک سفوف بنالیں ۔ گرم دودھ میں یہ سفوف اچھی طرح مکس کرلیں اور روزانہ دن میں دو بار پی لیں ۔ یہ عمل مسلسل چودہ دن تک جاری رکھیں ۔ اس کے استعمال سے دائمی قبض سے مکمل نجات مل جائے گی اور اس کے باعث پیٹ کی بیماریاں بھی ختم ہو جائیں گئی ۔
آج کل ہماری طرز زندگی اس قدر خراب ہو گئی ہے کہ اس کا اثر ہماری صحت پر ہوتاہے ۔ ہم نے اپنی زندگی اتنی مصروف کرلی ہے کہ ہمارے پاس ٹھیک سے کھانے پینے کا وقت بھی نہیں ہوتااوریہی عادات ہمیں کئی بیماریوں کے پاس لے کر جارہی ہیں ۔ اپنی ڈائٹ کو بدلیں جتنا ہوسکے منرلز اواور وٹامن سے بھرپورغذاکا استعمال کریں ۔ پھل اور تازہ سبزیوں کی اپنی خوراک مین لازمی شامل کریں ۔ بازاری بندڈبوں والی غذا ؤں سے پرہیز کرنے کی ہرمکمن کوشش کریں ۔ بعض اوقات چائے کا حد سے زیادہ استعمال بھی قبض کا موجب بنتاہے ۔ وقت پر کھانا کھائیں ۔دائمی قبض سے مروڑ اور پیچش کی بیماری بھی شدت پکڑ جاتی ہے ۔ ہر وقت پیٹ درد ، بھوک کا نہ لگنا ، کھٹی ڈکاریں آنا، پٹھوںمیں درد اور کھچاؤ، آدھے سر کادرد ،نیند کا پورا نہ ہونا بہت سے مسائل پیدا ہوجاتے ہیں ۔ خواتین کو اکثر حمل کےدوران بھی اس مسئلے کا سامنا کرنا پڑتاہے ۔ اس کا بہترین حل ہے کہ اس بیماری کو ہونے نہ دیاجائے ۔ دوئمی قبض خواتین کواس لیے زیادہ ہوتی ہے کہ جسم پر فالتوبڑی ہوئی چربی، دوران حمل کی کمی ، بے جاادویات کا استعمال کرتی ہیں ۔ صبح کی سیر کو اپنا معمول بنا لیں ۔

کیٹاگری میں : صحت